مسلمان مادر وطن کی خاطر اپنی جانیں قربان دینے والوں کی فہرست میں شامل ہوں: حاجی آدم قریشی

0
73
All kind of website designing

نئی دہلی،30/جون(نمائندہ):سوشل ورکر حاجی محمد آدم رحمان قریشی نے پریس کو جاری اپنے بیان میں کہاکہ حکومت نے حال ہی میں دفاعی خدمات میں اگنی پتھ اسکیم کا آغاز کیا ہے،اس میگاروزگاریوجناکااستعمال 10ویں اور 12ویں پاس کے نوجوان کر سکتے ہیں جنکی عمر 17 سے 23 سال کے درمیان ہیں۔البتہ تخمینی وقفہ کاری 50,000 پوسٹوں کو 30,000 سے 40,000 روپے کی تنخواہ کے ساتھ دیگر اضافی فوائد کے ساتھ مطلع کیا گیا ہے اور 4سال کی سروس کے بعد اگنیور ریٹائرمنٹ فائدہ کے طور پر تقریباً 11 لاکھ روپے کے ساتھ چھوڑنے کیلئے آزاد ہوں گے نیزفوائد یہیں ختم نہیں ہوتے۔ سی اے پی ایف ایس اور آسام رائفلز میں بھرتی کے دوران ریٹائر ہونے والے اگنیور کو ریزرویشن بھی ملے گا، کئی ریاستی حکومتوں نے صوبے کی پولیس فورس میں ریزرویشن کا بھی اعلان کیاہے،البتہ ملک میں بڑھتی بیروزگاری کے چیلنجنگ حالات کے درمیان اگنی پتھ اسکیم ان لاکھوں بیروزگار مسلم نوجوانوں کیلئے ایک اعزاز کے طورپر سامنے آئی ہے جو ایک روشن مستقبل کے حصول کیلئے منظم شعبے میں روزگار کی خواہش رکھتے ہیں۔انہوں نے کہاکہ 10 ویں اور 12 ویں اگنی پتھ اسکیم کے بعد مسلم طلبا کے اسکول چھوڑنے کی بلند شرح کے پس منظر میں ان کیلئے ایک بہترین موقع فراہم کرتا ہے، جو بصورت دیگر بیچلر ڈگری کی عدم موجودگی میں ملازمت تلاش کرنا مشکل ہوگا، اسکے علاوہ حکومت نے دور اندیشی ظاہر کی ہے کہ اگنیوروں کو ایک برج کورس فراہم کیا جائیگا تاکہ وہ دفاعی خدمات میں اپنے عہدہ کے بعدآسانی سے بیچلر ڈگری حاصل کر سکیں۔ لہذایہ بتانے کی ضرورت نہیں کہ میرٹ (25%) دکھانے والوں کو اگلے 15 سال تک اپنی قوم کی خدمت کا موقع ملے گا۔حاجی آدم قریشی نے مزید کہاکہ کچھ مسلم تنظیموں نے ہندوستانی مسلمانوں کی تصویر کشی میں کوئی کسر نہیں چھوڑی، انکی مسلسل پرتشدد سرگرمیوں میں ملوث ہونے کے باعث منفی سائے میں مٹھی بھر لوگوں کی نمائندگی کے باوجود یہ تنظیمیں پوری کمیونٹی کی آوازکی نمائندگی کرنے کا دعویٰ کرتی ہیں، جسکے نتیجے میں پوری کمیونٹی کی توہین ہوتی ہے، ایک قابل لیکن بیروزگار نوجوان ایسی تنظیموں کے تفرقہ انگیز ہتھکنڈوں کا شکار ہو جاتا ہے، اگنی پتھ جیسی اسکیمیں ان نوجوانوں کو اپنی توانائیوں کو صحیح سمت میں استعمال کرنے کیلئے ایک ضروری پلیٹ فارم فراہم کریں گی،دراصل ہندوستان ویر عبدالحمید اور بریگیڈیئر محمد عثمان جیسے قدآوروں کی سرزمین ہے، یہ با صلاحیت مسلم نوجوانوں کی ذمہ داری ہے کہ وہ ایسے بزرگوں کی وراثت کو آگے بڑھاتے ہوئے ان مسلم شہداکی طویل فہرست میں شامل ہوں جنہوں نے مادر وطن کی خاطر اپنی جانیں قربان کر دیں،اگنی پتھ اسکیم سے مسلم نوجوانوں کو نفرت کرنے والوں کو ایک مضبوط پیغام بھیجنے میں بھی مدد ملے گی اور یہ دکھایا جائیگا کہ ہندوستانی مسلمان دوسرے مذاہب کے ساتھی بھائیوں کی طرح قوم پرست ہیں، اگر کوئی ملک کے امن و سالمیت کوخطرے میں ڈالنے کی کوشش کرتا ہے تو اسے سب سے پہلے اگنیوروں کی ’لکشمن ریکھا‘کو عبور کرنا ہوگا۔

نیا سویرا لائیو کی تمام خبریں WhatsApp پر پڑھنے کے لئے نیا سویرا لائیو گروپ میں شامل ہوں

تبصرہ کریں

Please enter your comment!
Please enter your name here